Tuesday, May 28, 2024

آڈیو لیک، عمران خان کی سیاسی، اخلاقی ساکھ کو ایک اور دھچکا۔

- Advertisement -

اسلام آباد: آڈیو لیک، پی ٹی آئی کی ’سیاسی‘ اور عمران خان کی ’اخلاقی‘ ساکھ کو ایک اور دھچکا، مشکلات میں اضافہ، آڈیو انتہائی اہم اور نتیجہ خیز ثابت ہوسکتی ہے، عمران خان کو عدالت نے حکم دے دیا۔

9 جنوری کو آڈیو لیک سے یہ تاثر ملتا ہے کہ توشہ خانہ سے لائے گئے تحائف کی خرید و فروخت کا فوٹو گرافی ریکارڈ رکھا گیا تھا۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین اور سابق وزیراعظم عمران خان کو اسلام آباد کی مقامی عدالت نے توشہ خانہ کیس میں نوٹس جاری کرتے ہوئے 9 جنوری کو ذاتی حیثیت میں طلب کر لیا ہے۔

انگلش میں پڑھنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

اس سے قبل جمعہ 16 دسمبر کو ان کی اہلیہ سابق خاتون اول بشریٰ بی بی کی آڈیو منظر عام پر آئی ہے جو اس کیس کے حوالے سے بہت اہم اور نتیجہ خیز ثابت ہو سکتی ہے اور اس امکان کو یکسر رد نہیں کیا جا سکتا کہ اگر عدالتی احکامات اگر عمران خان 9 جنوری کو ذاتی حیثیت میں عدالت میں پیش ہوتے ہیں تو یہ دن نہ صرف ان کے لیے بلکہ پاکستان تحریک انصاف کے لیے بھی “اختیاری” ثابت ہو سکتا ہے۔

اسی مصنف کے اور مضامین
- Advertisment -

مقبول خبریں