Wednesday, April 24, 2024

مردم شماری کا ڈیٹا اکٹھا کرنے کی تاریخ میں توسیع

- Advertisement -

پی بی ایس کے شمار کنندگان نے پاکستان کے 156 میں سے 131 اضلاع میں مردم شماری کا 100 فیصد ڈیٹا کا عمل مکمل کر لیا ہے۔

اسلام آباد: حکومت نے چاروں صوبوں کے تقریباً 26 اضلاع کے جزوی حصوں میں جاری مردم شماری ڈیٹا کی مشق مکمل کرنے میں ناکامی کے بعد مردم شماری کے اعداد و شمار کو مکمل کرنے کی آخری تاریخ میں پانچ دن کی توسیع کر دی ہے۔

بعض علاقوں میں جاری مشق کے بارے میں بڑھتی ہوئی شکایات کے درمیان، خاص طور پر کراچی جیسے بڑے میٹروپولیٹن میں، حکومت نے ان تمام لوگوں کو موقع فراہم کرنے کے لیے آخری تاریخ میں توسیع کر دی جنہوں نے شکایت کی تھی کہ اس جاری مشق کے دوران ان کی مکمل گنتی نہیں کی گئی۔

مردم شماری کی مشق کی موجودہ تکمیل کی تاریخ 10 اپریل 2023 کی بجائے 15 اپریل 2023 ہے۔ اس بات کو مسترد نہیں کیا جا سکتا کہ اگر مردم شماری کی مشق متوقع توسیع کے ڈیڈ لائن اندر مکمل نہ ہو سکی تو حد بندی کے عمل کے بعد عام انتخابات کرائے جا سکتے ہیں۔

انگلش میں خبریں پڑھنے کے لئے یہاں کلک کریں

چیف آفیسر ڈاکٹر نعیم الظفر کے مطابق

مردم شماری کے چیف آفیسر ڈاکٹر نعیم الظفر کے مطابق، جنہوں نے پیر کےدن بتایاکہ، آبادی کی گنتی اور گھروں کی گنتی مکمل کرنے کی آخری تاریخ میں پانچ دن کی توسیع کر دی گئی۔ نئی آخری تاریخ 15 اپریل 2023 ہے۔ ان کے مطابق، صوبائی مردم شماری کمشنروں کو نوٹس بھیجنے کی ہدایت کی گئی ہے کہ وہ اپنے متعلقہ علاقوں میں مردم شماری کی مشق مکمل کرنے کے لیے پانچ دن کی ڈیڈ لائن میں توسیع کا نوٹیفکیشن جاری کریں۔

ڈاکٹر نعیم نے بتایا کہ ، ملک بھر کے 156 اضلاع میں سے، ہم نے 130 سے زائد اضلاع میں مردم شماری کی مشق مکمل کر لی ہے اور صوبائی حکومتوں سے کہا ہے کہ وہ باقی اضلاع میں جزوی تکمیل کو یقینی بنائیں۔

انہوں نےیہ بھی کہا کہ صوبائی انتظامیہ مخصوص ڈیوٹی پوری کرنے سے قاصر ہیں کیونکہ بعض علاقوں میں یہ مشق تاخیر سے شروع کی گئی تھی۔ انہوں نے اصرار کیا کہ نئی ڈیڈ لائن تک مختص کردہ اسائنمنٹ کو مکمل کرنے کے لیے، انہیں اب مزید تیزی سے آگے بڑھنے کی ضرورت ہوگی۔

آپ  نے کہا کہ پاکستان بیورو آف سٹیٹسٹکس (پی بی ایس) کو پاکستان الیکشن کمیشن کو بھیجنے سے پہلے ایک مطالعہ مکمل کرنے میں ایک ہفتہ لگے گا۔

ان کا کہنا تھاکہ، مردم شماری کے نتائج ای سی پی کے ساتھ شیئر کرنے کے لیے مشترکہ مفادات کی کونسل (سی سی آئی) کی منظوری لی جائے گی، جو کہ قومی اسمبلی اور صوبائی اسمبلیوں میں گلے عام انتخابات کےحلقوں کی تعداد بڑھانے کے لیے ڈی لیمیٹیشن کی مشق کرے گی۔

اسی مصنف کے اور مضامین
- Advertisment -

مقبول خبریں