Thursday, May 30, 2024

آزادی کے لیے جان دے دوں گا، عمران خان

- Advertisement -

لاہور: پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہ حقیقی آزادی کے عزم سے پیچھے نہیں ہٹیں گے۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ ’ہم خاموش رہے تو آنے والی نسلیں معاف نہیں کریں گی۔ آزادی کی جنگ لڑتے ہوئے آنے والی موت بہت بڑی ہے، ہمیں حقیقی آزادی پر اصرار کرنا چاہیے۔

انگلش میں پڑھنے کے لئے یہاں کلک کریں

خان نے گزشتہ روز لاہور میں ویڈیو لنک کے ذریعے قوم سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ وہ جانتے ہیں کہ عدلیہ پر بہت زیادہ دباؤ ہے اور ججز کو نامعلوم نمبروں سے کالز موصول ہو رہی ہیں۔

پی ٹی آئی چیئرمین  نے کہا کہ ججز کو دھمکیاں دی جارہی ہیں لیکن امید ہے عدلیہ ملک میں قانون کی حکمرانی قائم کرے گی۔

پی ٹی آئی چیئرمین کے مطابق وہ غلامی پر موت کو ترجیح دیتے ہیں اور آزادی کے لیے جان دینے کو تیار ہیں۔  عمران خان کے مطابق ایف آئی اے سمیت تمام اداروں کو مذموم مقاصد کے لیے استعمال کیا جا رہا ہے۔ وہ اب ہر چیز کو نظر انداز کرتے ہوئے ان کی پارٹی کے خلاف الزامات کو دیکھ رہے ہیں۔

خان نے کہا کہ، “افسران بھی اس رویے سے مطمئن نہیں ہیں۔ گھروں کو مسمار کرنے، کاروبار بند کرنے، اور بچوں کو دھمکیاں دینے جیسے ظلم کے باوجود، لوگ ہمارے ساتھ جڑے ہوئے ہیں۔”

عمران خان نے کہا کہ میں نے کہا ہے کہ اگر دباؤ بہت زیادہ ہے تو چھوڑ دیں لیکن امیدوار کہتے ہیں کہ اگر ہم پی ٹی آئی کو الوداع کہہ دیں۔ عوام ہمیں نہیں پہچانیں گی۔ ملکی تاریخ میں کبھی ایسا سیاسی دباؤ نہیں لگایا گیا۔

“وہ مل کر کام کر رہے ہیں،” انہوں نے نوٹ کیا، “اور ان دانستہ کارروائیوں کے نتیجے میں ادارے تباہ ہو رہے ہیں، جبکہ جرائم کی روک تھام کے اداروں کو پی ٹی آئی کو ختم کرنے کا کام سونپا گیا ہے۔”

عمران خان نے کہا:

انہوں نے کہا کہ وہ پارٹی بنا کر ووٹ تقسیم کریں گے اور اس میں پی ٹی آئی چھوڑنے والوں کو بھی شامل کریں گے۔ کہ وہ مخلوط حکومت بنائیں گے، اور یہ کہ لوگ مسلم لیگ (ن) کو ووٹ نہیں دیں گے۔

عمران خان کے مطابق کرنل عاصم سیکیورٹی آفیسر کو بھی چار دن تک (اے ڈبلیو او ایل) جانے کے بعد گرفتار کر لیا گیا تھا۔

اسی مصنف کے اور مضامین
- Advertisment -

مقبول خبریں