Saturday, June 22, 2024

کراچی فلور ملز نے ہڑتال شروع کرنے کا اعلان کر دیا۔

- Advertisement -

کراچی کے اندر سے گندم کی مفت نقل و حمل کے چیئرمین فلور ملز ایسوسی ایشن نے سندھ حکومت کو ترسیل پر پابندی میں نرمی کے لیے 48 گھنٹے کی ڈیڈ لائن دے دی۔

کراچی میں گندم کی ترسیل پر پابندی نہ اٹھانے کے بعد جمعرات کو کراچی کی فلور ملز  نے آج رات سے ہڑتال کرنے کا اعلان کیا ہے۔

ان کا کہنا ہے کہ صوبے میں کرپشن کی وجہ گندم کی قیمتوں میں فرق ہے۔

انگلش میں خبریں پڑھنے کے لئے یہاں کلک کریں

فلور ملز ایسوسی ایشن کے چیئرمین عامر چوہدری نے ایک نیوز کانفرنس میں کہا کہ کراچی میں گندم کا بحران  محکمہ خوراک کی بھتہ خوری کے نتیجے میں مزید سنگین ہوگیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ گندم کا سٹاک ختم ہو گیا ہے اور فلور ملوں کو بڑے مسائل درپیش ہیں۔

عامر چوہدری کے مطابق، 30 ملین سے زیادہ آبادی والے شہر کراچی میں گندم کی پیداوار کا کوئی ذریعہ نہیں ہے۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ، ضرورت پوری کرنے کے لیے سندھ اور پنجاب سے گندم سپلائی کی جاتی ہے۔

اس بات پر بھی روشنی ڈالی کہ محکمہ خوراک سندھ نے 13 پوائنٹس پر چیک پوسٹیں قائم کی ہیں۔
گندم کی تقسیم پر پابندی ختم کرنے کے لیے سندھ حکومت کو 48 گھنٹے کی مہلت دی گئی۔

مزید برآں، عامر چوہدری نے کہا ہےکہ سندھ حکومت کراچی سے گندم کی مفت ترسیل کی اجازت دے۔

انہوں نے مزید کہا کہ صوبے میں گندم کی کرپشن کے لئے اگر فوری اقدامات نہ کیے گئے تو کراچی شہر میں آٹے کا بحران جنم لے سکتا ہے۔

کراچی چیئرمین فلور ملز ایسوسی ایشن نے سندھ حکومت کو گندم کی ترسیل پر پابندی میں نرمی کے لیے 48 گھنٹے کی ڈیڈ لائن دے دی۔

اسی مصنف کے اور مضامین
- Advertisment -

مقبول خبریں