Monday, April 22, 2024

خالد رضا کے قتل کیس میں غیر ملکی ہاتھ کا شبہ ہے۔

- Advertisement -

کراچی: تفتیش کاروں کو کراچی میں ان کی رہائش گاہ کے باہر فیڈریشن آف پرائیویٹ اسکولز کے وائس چیئرمین سید خالد رضا کے قتل میں ‘غیر ملکی ہاتھ’ کے شواہد ملے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق ماہر تعلیم خالد رضا کے قتل کی ابتدائی تفتیش میں بتایا گیا ہے کہ قتل کی منصوبہ بندی کی گئی تھی اور ملزمان نے خالد رضا کو قتل کرنے سے قبل اس کی بازیابی کی۔

تفتیشی حکام کا کہنا ہے کہ قتل میں جدید ہتھیار استعمال کیے گئے اور ایسی گولیاں اس سے پہلے کسی حملے میں استعمال نہیں ہوئیں۔

تفتیش کار مشتبہ افراد کے راستے کی فوٹیج حاصل کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔

انگلش میں مزید خبریں پڑھنے کے لئے یہاں کلک کریں 

اس سے قبل نامعلوم مسلح افراد نے فیڈریشن آف پرائیویٹ اسکولز کے وائس چیئرمین سید خالد رضا کو کراچی میں ان کی رہائش گاہ کے باہر قتل کردیا تھا۔

فائرنگ کا واقعہ کراچی کے علاقے گلستان جوہر بلاک 7 میں پیش آیا۔ پولیس کا کہنا تھا کہ مقتول کی شناخت خالد رضا کے نام سے ہوئی ہے۔ پولیس نے تفصیلات بتاتے ہوئے بتایا کہ نامعلوم مسلح افراد نے رضا کو اس کے گھر کی دہلیز پر نشانہ بنایا۔

پولیس نے مزید کہا کہ حملہ آور رضا کو قتل کرنے کے بعد سامان نہیں لے گئے۔ ان کا کہنا تھا کہ رضا پرائیویٹ سکولز ایسوسی ایشن کا عہدیدار ہے۔ مزید یہ کہ وہ فیڈریشن آف پرائیویٹ سکولز کے وائس چیئرمین تھے۔

اسی مصنف کے اور مضامین
- Advertisment -

مقبول خبریں