Saturday, April 13, 2024

جعلی ڈگریوں والے پی آئی اے ملازمین کو بڑا ریلیف مل گیا

- Advertisement -

منگل کو قومی اسمبلی کی خصوصی کمیٹی برائے متاثرہ سرکاری ملازمین نے فیصلہ کن کارروائی کی منظوری دیتے ہوئے پی آئی اے ملازمین کو بحال کرنے کا حکم دیا۔

کارکنوں پر جعلی ڈگریوں کا الزام تھا۔ سوائے ان لوگوں کے جو رضاکارانہ علیحدگی پروگرام کے تحت ریٹائر ہوئے۔ این اے کمیٹی نے ان پی آئی اے ملازمین کی بحالی کے لیے مخصوص ہدایات فراہم کیں۔

انگلش میں پڑھنے کے لئے یہاں کلک کریں

اس کے علاوہ کمیٹی نے ہدایت کی کہ ان متاثرہ ملازمین کی سنیارٹی اور سابقہ ذاتی نمبر بحال کیے جائیں۔ تاہم، وی ایس ایس کے تحت ریٹائر ہونے والے ملازمین کو جلد ریٹائرمنٹ اسکیم سے حاصل کردہ فنڈز واپس کرنے کی مخصوص ہدایت دی گئی تھی۔

پاکستان سول ایوی ایشن اتھارٹی کے ٢٦٠٠ عارضی اور کنٹریکٹ ورکرز کو بھی این اے باڈی  نے ریگولر کرنے کا حکم دیا ہے۔

کمیٹی نے متعلقہ حکام سے پی آئی اے کے خلاف الزامات واپس لینے کا کہا۔ ان ملازمین کے لیے جو مبینہ طور پر جھوٹی ڈگریوں کا استعمال کرتے ہوئے اپنے تجربے کی فہرست کو مزید محفوظ بنا رہے ہیں۔

جعلی ڈگریوں کی بنیاد پر برطرف کیے گئے پی آئی اے ملازمین کو بحال کرنے کی کوشش۔ قومی اسمبلی کی کمیٹی نے متاثرہ سرکاری اہلکاروں کو ریلیف فراہم کرنے کے لیے فیصلہ کن کام کیا ہے۔

اسی مصنف کے اور مضامین
- Advertisment -

مقبول خبریں