Thursday, May 30, 2024

ترجمہ قرآن اب پاکستانی یونیورسٹیوں میں ایک لازمی مضمون

- Advertisement -

ہائر ایجوکیشن کمیشن (ایچ ای سی) نے ملک بھر کی یونیورسٹیوں میں انڈرگریجویٹ ڈگری حاصل کرنے کے لیے قرآن پاک کے مطالعہ کو لازمی شرط قرار دیا ہے، جو کہ ایک اہم پیشرفت ہے۔

ایچ ای سی کے مشیر (تعلیم، نصاب اور این اے ایچ ای) محمد رضا چوہان کے خط کے مطابق، یونیورسٹیوں اور ڈگری دینے والے اداروں (ڈی اے آئی) کو مسلمان طلباء کے لیے قرآن پاک کے مطالعہ پر ایک کورس پیش کرنے کی ضرورت ہے جس میں ترجمہ، تجوید اور تفسیر شامل ہونی چاہیے۔

انگلش میں خبریں پڑھنے کے لئے یہاں کلک کریں 

پیغام میں کہا گیا کہ کورس کو کریڈٹ نہیں دیا جائے گا اور اس میں کوئی اضافی گریڈ یا کریڈٹ اوقات نہیں ہوں گے۔ 2023 کے موسم خزاں کے آغاز سے، یہ ترجمہ قرآن پاک مضمون تمام انڈرگریجویٹ طلباء کے لیے درکار ہوگا۔

ترجمہ قرآن مضمون کا انتخاب 

یہ انتخاب سینیٹ کی قرارداد نمبر 533 کے رد عمل میں کیا گیا تھا، جسے 16 جنوری 2023 کو منظور کیا گیا تھا۔ ایچ ای سی کی جانب سے یونیورسٹیوں اور ڈی اے آئیز کو بھی 30 جون تک تعمیل کی رپورٹ داخل کرنے کی ضرورت ہے۔

خلاصہ یہ کہ پاکستانی یونیورسٹیوں میں قرآن پاک کی تعلیم اب انڈر گریجویٹ تعلیم کا ایک لازمی جزو ہو گا جس کا مقصد طلباء کو ان کے عقیدے اور اس کے اصولوں پر گہری گرفت فراہم کرنا ہے۔

اسی مصنف کے اور مضامین
- Advertisment -

مقبول خبریں