Tuesday, July 16, 2024

کراچی میں کانگو بخار نے ایک اور جان لے لی

- Advertisement -

کراچی آغا خان یونیورسٹی ہسپتال میں کانگو بخار نے ایک اور جان لے لی

تازہ ترین خبر کے مطابق سی سی ایچ ایف کا ایک اور مریض بدھ کو نجی اسپتال میں دم توڑ گیا، جس کے بعد گزشتہ چار دنوں میں مرنے والوں کی تعداد دو ہوگئی۔

اسی روز دو مریضوں کو ایدھی ویلفیئر ایجنسی کے زیر انتظام ایئر ایمبولینس کے ذریعے کوئٹہ سے کراچی منتقل کیا گیا۔

انگلش میں خبریں پڑھنے کے لیے یہاں کلک کریں 

تاہم تازہ ترین خبر کے مطابق یہ اموات آغا خان یونیورسٹی ہسپتال  میں ہوئیں، جہاں ٹک سے پیدا ہونے والی بیماری سے متاثرہ مزید چار مریضوں کو داخل کیا گیا تھا۔

شبیر عالم

اے کے یو ایچ کے اہلکار شبیر عالم نے کہا، “مشتبہ اور سی سی ایچ ایف کے لیے مثبت ٹیسٹ کیے گئے مریضوں سمیت کل مریضوں کی تعداد اب 16 ہے۔ ان میں سے 12 نے اس بیماری کے لیے مثبت ٹیسٹ کیا ہے جبکہ چار مریضوں کے لیب کے نتائج کا انتظار ہے،” اے کے یو ایچ کے اہلکار شبیر عالم نے مزید کہا کہ ایک مریض کی حالت نازک تھی۔

انہوں نے مزید کہا، “دو مریضوں، جن میں سے ایک کا سی سی ایچ ایف کا ٹیسٹ منفی آیا اور دوسرے جو انفیکشن سے صحت یاب ہوئے، کو ڈسچارج کر دیا گیا ہے۔

جب کہ مسٹر عالم نے یہ پوچھے جانے پر تبصرہ کرنے سے انکار کردیا کہ کیا متوفی صحت کی دیکھ بھال فراہم کرنے والا تھا جسے حال ہی میں کوئٹہ سے کراچی منتقل کیا گیا تھا، ذرائع نے بتایا کہ وہ صحت کی دیکھ بھال فراہم کرنے والے نہیں تھے۔

اسی مصنف کے اور مضامین
- Advertisment -

مقبول خبریں