Tuesday, July 16, 2024

پاکستان پولیس لائنز پر ایک ہفتے میں دوسرا حملہ

- Advertisement -

ریسکیو سروسز کے مطابق: پولیس لائنز کوئٹہ کے قریب دھماکے میں کم از کم پانچ افراد زخمی۔ 

ایدھی حکام نے پولیس لائنز کی جگہ پر ریسکیو آپریشن کی قیادت کی، ڈان نیوز کو بتایا کہ زخمیوں کو سول اسپتال کوئٹہ منتقل کیا گیا۔

پاکستان میں پولیس لائنز پر ایک ہفتے میں دوسرا حملہ

تاحال پولیس نے کوئی بیان جاری نہیں کیا اور دھماکے کی نوعیت فی الحال واضح نہیں ہے۔

انگلش میں پڑھنے کے لئے یہاں کلک کریں

کالعدم تحریک طالبان پاکستان (ٹی ٹی پی) نے اتوار کو جاری کردہ ایک بیان میں اس حملے کی ذمہ داری قبول کی ہے۔ اس میں بتایا گیا کہ حملوں کے پیچھے کیا وجہ ہے، ہماری سیکیورٹی سروسز کا ہدف ہے۔

پاکستان میں پولیس لائنز پر ایک ہفتے میں دوسرا حملہ

“دہشت گردی ہیروزم نہیں ہے”

’’پاکستان میں دہشت گردی بند کرو‘‘

اس ہفتے کے دوران پاکستان میں یہ دوسرا حملہ ہے، پشاور پولیس لائنز کے علاقے میں ایک خوفناک خودکش دھماکے کے بعد تقریباً ٨٠ افراد ہلاک ہوئے، جن میں زیادہ تر پولیس اہلکار تھے۔

پاکستان اس وقت دہشت گردی کی لہر کا شکار ہے، بنیادی طور پر خیبر پختونخواہ میں۔ اسلام آباد کے مضافات تک دہشت گردانہ حملے کا امکان ہے۔

ٹی ٹی پی، جو کہ افغان طالبان کے ساتھ نظریاتی روابط رکھتی ہے حکومت پاکستان کے ساتھ اس گروپ کے امن مذاکرات میں خلل پڑنا شروع ہوا۔ تو اس نے گزشتہ سال ١٠٠ سے زائد حملے کیے، جن میں سے زیادہ تر اگست کے بعد ہوئے  ٹی ٹی پی کی طرف سے گزشتہ سال ٢٨ نومبر کو جنگ بندی باضابطہ طور پر ختم ہو گئی تھی۔

گزشتہ مہینہ ٢٠١٨ کے بعد سب سے مہلک مہینہ ہے، جس میں ملک بھر میں کم از کم ٤٤ عسکریت پسندوں کے حملوں میں ١٣٤ افراد اپنی جانیں گنوا بیٹھے۔

اسی مصنف کے اور مضامین
- Advertisment -

مقبول خبریں